Artical Written by Muhammad Shfqat


screenshot_20161025-224410

﴿ بڑے دل والا ﴾
٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭
میرے ساتھ بیٹھی شخصیت جامعہ دارالعلوم کراچی میں اس سال
دورة حدیث کے طالب علم ہیں،یہ عظیم انسان مجھ سے بھی پستہ قد ہیں،
مگرعزم وہمت کے پہاڑ ہیں۔موصوف علم دین حاصل کرنے کے لےٴ
خیبرپختون خواہ کے علاقے دیر سے تشریف لاےٴ ہیں،میں ان کی بلند ہمتی
اورجواں مردی سے بہت متاثر ہوا ہوں۔۔میں سمجھتا ہوں،یہ ہم سب کے لےٴ
قابل تقلید شخصیت ہیں،جو بے شمار اعذار کےباوجود اپنے مشن اور کازسے
پیچھے نہیں ہٹے۔میرے نزدیک یہ شخص ہم میں سے لاکھوں لوگوں سے ہزارہا
درجے بہتر ہیں، یہ میں اس لےٴ کہہ رھا ہوں کہ ہمارے بہت سے موجودہ اور سابقہ
حکمران جن کو سورة اخلاص بھی صحیح نہیں آتی،یہ ان نام نہاد حکمرانوں سے لاکھ درجے
بلند رتبے پرفاںز ہیں ،کیونکہ یہ عالم باعمل ہونے کے ساتھ ساتھ حافظ قرآن بھی ہیں۔
چونکہ یہ عظیم طالب علم مکمل طورپر چل پھر نہیں سکتے،اور جسمانی طورپرنہایت
کمزورہیں،اسی لےٴ ان کے پانچ ساتھی ہمیشہ ان کے ساتھ خدمت پرمامور رہتے ہیں۔
کویٴ ساتھی ان کو مسجد لے کرجاتا ہے، تو کویٴ ان کواپنے کندھے پر بٹھا کر درسگاہ میں چھوڑتا ہے۔
میں ان کی خدمت پر ماموران پنج تن پاک ساتھیوں کو بےلوث خدمت کرنے پر سلام پیش کرتا ہوں۔
میرا حکومت وقت، خصوصا وزیراعظم پاکستان میاں محمد نوازشریف،اور وزیراعلی
خیبرپختون خواہ،جناب پرویزخٹک سے مطالبہ ہیکہ اس چھوٹے قد کے بڑے انسان کو
کسی اسلامک سینٹر میں یا پھرکسی سرکاری مسجد میں قرآن وحدیث پڑھانے کا موقع دیا جاےٴ،تاکہ آںندہ کویٴ سیاست دان
کسی اجلاس میں غلط تلاوت نہ کرسکے۔باقی ان کو شادی کی کویٴ فکر نہیں،کیونکہ یہ بڑے
دل والے ہیں،اوراپنے سے بڑی قد کی لڑکی سے شادی کرنا چاھتےہیں۔ہے کویٴ دل والا تو
سامنے آےٴ۔آخر میں بس اتنا ہی لکھوں گا إ
سسکیاں کس زباں میں لکھوں
آج الفاظ آبدیدة ہیں٭

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

You may use these HTML tags and attributes: <a href="" title=""> <abbr title=""> <acronym title=""> <b> <blockquote cite=""> <cite> <code> <del datetime=""> <em> <i> <q cite=""> <strike> <strong>